Humbistari Ke Adaab | Sohbat Ka islamic Tariqa | khayalat main humbestri karna | Taswawor main humbestri | تصورات میں ہمبستری کرنا

Humbistari Ke Adaab

 تصورات میں ہمبستری کرنا 

Humbistari Ke Adaab |  Sohbat Ka islamic Tariqa | khayalat main humbestri karna | Taswawor main humbestri |


انسان اگر بیوی سے ہمبستری کر رہا ہے وہ یہ سوچے کہ میں اپنے دوست  (گرل فرنڈ)سے ہمبستری کر رہا ہوں اگر عورت اپنے خاوند سے ہمبستری کرے اور وہ یہ سوچے کہ وہ اپنے کسی دوست سے ہمبستری کر رہی ہے کیا یہ جائز ہے 

جواب 

آپ علیہ الصلاۃ والسلام کے حدیث کا مفہوم ہے آپ نے فرمایا کے دل میں خیال آتا ہے اور ہاتھ پاؤں اس کی تصدیق کرتے ہیں آنکھوں کو غلط استعمال کرنا یہ آنکھوں کا زنا ہے ہاتھوں کا غلط استعمال کرنا یہ ہاتھوں کا گناہ ہے پاؤں کا غلط استعمال کرنا یہ پاؤں کا گناہ ہے دل میں غلط خیالات جان بوجھ کر لینا یہ بھی بولا ہے 

اس لیے اگر کوئی شخص ہمبستری تو بیوی سے کر رہا ہوں یا کوئی بیوی ہمبستری تو شوہر سے کر رہی ہو اور اس وقت دوسرے شخص کا خیال آنا یہ بہت سخت گناہ ہے اور یہ اللہ تعالی کی نعمت کی ناشکری ہے اس لئے ان گناہوں سے انسان کو بچنا چاہیے 

Sohbat Ka islamic Tariqa

عورت کے تصور سے منی یامذی وغیرہ کا خروج اور اس کا حکم

ایک شخص کو بیٹھے بیٹھے کسی لڑکی کا خیال آیا، یااس نے کسی لڑکی کو دیکھا یا عورت کی تصویر دیکھی یا ناول پڑھتے ہوئے گندے خیالات اور شہوت پیدا ہوئی اور اس کے بعد خیالات میں گم ہوگیا اور عضو میں ایستادگی ہوئی اس کے بعد اگرمنی کا خروج ہو تو غسل واجب ہوگا اور اگر مذی کا خروج ہوا تو غسل واجب نہ ہوگا وضو کرلینا کافی ہے (بدن یاکپڑے پرمذی لگی ہوتواس کا دھونا اور پاک کرلینا ضروری ہے

Spread the love

Leave a Comment

%d bloggers like this: