Ruju after one talaq | What is RUJU in Islam | 2 talaq k baad ruju | Talaq Kay Baad Ruju Aur Is Ka Tariqa | طلاق کی تعدادوانتہا اور رجوع کرنے کا حکم

Talaq Kay Baad Ruju Aur Is Ka Tariqa

Ruju after one talaq |   What is RUJU in Islam | 2 talaq k baad ruju |  Talaq Kay Baad Ruju Aur Is Ka Tariqa |  طلاق کی تعدادوانتہا اور رجوع کرنے کا حکم


 طلاق کی تعدادوانتہا اور رجوع کرنے کا حکم

2 talaq k baad ruju

بعض لوگوں نے یہ مسئلہ سن لیا ہے کہ اگر ایک طلاق دے کر رجوع کرلے تو نکاح بدستورقائم رہتا ہے۔ تو اس کا مطلب یہ سمجھتے ہیں کہ خواہ کتنی ہی بارایسی حرکت کرے (یعنی ایک طلاق دے) ہمیشہ رجعت جائزہے سو سمجھ لینا چاہیے کہ یہ مسئلہ اس طرح نہیں ہے۔

طلاق کی حدہی تین ہے خواہ ایک بار میں یا دوبار میں یا تین بار میں۔ اور خواہ درمیان میں رجعت ہوئی یا نہ ہوئی ہو۔ پس اگر کسی نے ایک طلاق رجعی دے کر رجعت کرلی۔ یہ رجعت درست ہے۔ کیوں کہ ایک طلاق کے بعد یہ رجعت ہوئی پھر اگر دوسری طلاق کے بعد ہوئی۔ اور اس کو دو طلاق کے بعد اس لیے کہاجائے گا کہ اس دوسری طلاق کے ساتھ اس پہلی طلاق کو بھی شمارکیا جائے گا۔ اگرچہ (پہلی طلاق سے) رجعت ہوچکی تھی۔ 

رجعت سے طلاق کا اثر جاتا رہا مگر طلاق کی ذات موجود ہے۔ پھر اگر اس نے تیسری طلاق دی اب رجعت درست نہیں۔ کیوں کہ مذکورہ تقریر کے مطابق یہ رجعت تین طلاق کے بعد ہوئی اور تین طلاق کے بعد رجعت درست نہیں۔ اسی طرح اگر ایک یا دو طلاق کے بعد رجعت نہ کی ہو اور عدت گزارنے سے وہ نکاح ختم ہوگیا ہو۔ اور پھر دونوں نے راضی ہوکر باہم نکاح کرلیا اور پھر طلاق دینے کا اتفاق ہو تو اس طلاق کے وقت پھر پہلی طلاق کو جمع کیا جائے گا جب جمع ہو کر (یعنی پہلی والی کو ملا کر) مجموعہ تین ہوجائے گا۔ پھر رجعت جائزنہ رہے گی۔

تنبیہ: یہ دوتک رجعت طلاق رجعی میں ہے بائنہ میں نہیں۔ (اصلاح انقلاب، صفحہ

I Covered these points in the video

> talaq aur uske dene ka tariqa

> talaq ke baad ruju ka tariqa

> talaq,talaq dene ka sahi tarik

> aik talaq k baad rujoo ka tariqa

> (1) aik talaq k baad rujoo ka tariqa

> talaq ka tariqa

> aik talaq ke baad ruju ka tarika

> triple talaq

> ek talaq ke baad wapas milne ka tariqa

> talaq ka masla

> talaq in islam

> talaq ke bad raju ka tarika

Spread the love

Leave a Comment

%d bloggers like this: